بھارت میں الیکشن کے پہلےمرحلے میں تصادم میں 2 افراد ہلاک

بھارت میں پارلیمانی انتخابات کے پہلے میں ریاست آندھرا پردیش میں سیاسی جماعتوں کے کارکنوں میں تصادم کے نتیجے میں 2 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت میں پارلیمانی انتخابات کے پہلے میں ریاست آندھرا پردیش میں سیاسی جماعتوں کے کارکنوں میں تصادم کے نتیجے میں 2 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے۔ بھارتی ریاست مہاراشٹر کے ضلع گاڈ چیرولی میں پولنگ اسٹیشن کے قریب بارودی سرنگ کا دھماکہ ہوا۔پولنگ کے دوران انتخابی بے قاعدگیوں کی شکایات بھی سامنے آئیں اور سیاسی جماعتوں نے ایک دوسرے پر دھاندلی کے الزامات بھی لگائے، پولنگ کےلیے لگائی گئی متعدد الیکٹرانک مشینیں بھی خراب نکلیں۔ بھارتی فورسز نے ہنگامہ آرائی کے الزام میں کئی افراد کو گرفتار کرکے ان کے قبضے سے اسلحہ برآمد کرلیا جبکہ بعض مقامات پر سیکیورٹی اہلکاروں نے شرپسندوں کو منتشر کرنے کے لیے ہوائی فائرنگ اور لاٹھی چارج بھی کیا۔

واضح رہے کہ بھارت میں الیکشن کے پہلےمرحلے میں 20 ریاستوں میں 91 نشستوں پر ووٹنگ کا عمل شروع ہوگیا۔ مجموعی طور پر 450 سے زائد سیاسی جماعتیں الیکشن میں حصہ لے رہی ہیں تاہم 6 بڑی جماعتیں ملک پر حکمرانی کیلئے آمنے سامنے ہیں جن میں بی جے پی اور کانگریس نمایاں ہیں۔ جن ریاستوں میں پولنگ ہو رہی ہے، ان میں آندھرا پردیش، ارونچل پردیش، آسام، بہار، چھتیس گڑھ، مہاراشٹرا، ، مانی پور، میزورام، ناگالینڈ، اودیشا، سکم، تلنگانا، اترپردیش، اترکھنڈ ، کشمیراورمغربی بنگال شامل ہیں۔ دوسرے مرحلے میں 18 اپریل کو 13 ریاستوں میں پولنگ ہوگی جبکہ کل 7 مرحلوں میں ہونے والے انتخابات کیلئے ووٹنگ 19 مئی تک جاری رہے گی،نتائج کا اعلان 23 مئی کو ہوگا۔ بھارت کی پارلیمان کی 543 نشستیں ہیں اور حکومت سازی کے لیے 272 نشستیں درکار ہیں۔

دنیا کے سب سے بڑے انتخابات میں 90 کروڑ سے زیادہ ووٹرز دس لاکھ پولنگ اسٹیشنز پر اپنی رائے کا اظہار کریں گے۔ ان میں سے ڈیڑھ کروڑووٹرز کی عمر18 سے 19سال تک ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

News Code 1889619

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 10 =