آرٹیکل 370 کے خاتمہ سے کشمیر کا رابطہ بھارت سے ختم ہوجائےگا

ہندوستان کے زیر انتظام کشمیر کی سابق وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نےکہا ہے کہ آرٹیکل 370 کی وجہ سے کشمیر ہندوستان کے ساتھ جڑا ہوا ہے اگر بھارت نے اسے ختم کردیا تو کشمیر کا رابطہ ہندوستان کے ساتھ خود بخود ختم ہوجائےگا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے کشمیر ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستان کے زیر انتظام  کشمیر کی سابق وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نےکہا ہے کہ آرٹیکل 370 کی وجہ سے کشمیر ہندوستان کے ساتھ جڑا ہوا ہے اگر بھارت نے اسے ختم کردیا تو کشمیر کا رابطہ ہندوستان کے ساتھ خود بخود ختم ہوجائےگا۔محبوبہ مفتی نے بھارت کی انتہا پسند حکمراں جماعت بی جے پی کے وزیر خزانہ کو دو ٹوک الفاظ میں جواب دیتے ہوئے کہا کہ " اگر آرٹیکل 370 ختم کیا گیا تو کشمیرکا بھارت  سے تعلق ختم ہوجائےگا" ۔انہوں نے مزید کہا کہ کشمیر کو بھارت کے آئین میں جو خصوصی حیثیت دی گئی تھی وہ ختم کی گئی تو بھارت کو دوبارہ سوچنا ہوگا۔ انہوں نے مزید کہا کہ کشمیر کو بھارت کے آئین میں جو خصوصی حیثیت دی گئی تھی وہ ختم کی گئی تو بھارت کو دوبارہ سوچنا ہوگا۔محبوبہ مفتی نے یہ بھی کہا کہ جن شرائط پر ہم آپ کے ساتھ آئے تھے وہ ختم کی گئیں تو سوچنا ہوگا کہ ایک مسلمان اکثریتی ریاست بھارت کے ساتھ رہنا بھی چاہیے گی یا نہیں؟ ان کا کہنا تھا کہ بھارت آرٹیکل 370 ختم کرتا ہے تو کشمیر کے ساتھ اپنے تعلق پر نئے سرے سے بات چیت کرنا ہوگی،جس کی نئی شرائط طے کی جائیں گی۔ سابق وزیراعلیٰ نے مزید کہا کہ بھارتی آئین کا آرٹیکل 370 ہ کشمیر کو خصوصی خود مختار حیثیت دیتا ہے۔ واضح رہے کہ بھارتی وزیر خزانہ نے چند روز قبل آئین میں کشمیر کی خصوصی حیثیت سے متعلق ترمیم کا مطالبہ کیا تھا۔

News Code 1889319

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 4 =