افغانستان نے پاکستان سے اپنا سفیر واپس بلالیا

پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے کابل میں نگراں حکومت تشکیل دینے کی تجویز کو افغانستان نے غیر ذمہ دارانہ قرار دیتے ہوئے پاکستان سے اپنے سفیر کو واپس بلالیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز  کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے کابل میں نگراں حکومت تشکیل دینے کی تجویز کو افغانستان نے غیر ذمہ دارانہ قرار دیتے ہوئے پاکستان سے اپنے سفیر کو واپس بلالیا۔ افغان وزارت خارجہ کے ترجمان صبغت اللہ احمدی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ افغانستان نے پاکستان کے ڈپٹی سفیر کو وزیر اعظم کے غیر ذمہ دارانہ بیان پر بحث کے لیے وزارت امور خارجہ میں طلب کرلیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کے بیان سے پاکستان کی مداخلتی پالیسی ثابت ہوتی ہے اور یہ افغانستان کی خود مختاری پر حملہ ہے۔

خیال رہے کہ پاکستانی وزیر اعظم عمران خان نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ افغان حکومت امن مرحلے میں رکاوٹ بنی ہوئی ہے اور ان کا طالبان سے براہ راست مذاکرات کا مطالبہ ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے افغان حکومت کے اعتراضات کے پیش نظر طالبان رہنماؤں سے طے شدہ ملاقات منسوخ کردی ہے۔ انہوں نے کہا تھا کہ افغانستان میں نگراں حکومت کے قیام سے امریکا اور طالبان کے درمیان ہونے والے امن مذاکرات میں مزید بہتری آئے گی کیونکہ طالبان نے موجودہ حکومت سے بات کرنے سے انکار کردیا ہے۔

News Code 1889190

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 10 =