لیبیا میں مہاجرین کی کشتی ڈوبنے سے 9 افراد ہلاک

لیبیا میں پناہ گزینوں کو لے جانے والی کشتی ڈوب گئی جس کے نتیجے میں 9 افراد ہلاک ہوگئے جب کہ 18 افراد کو بحفاظت نکال لیا گیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے فرانسیسی خبررساں ادارے اے ایف پی کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ لیبیا میں پناہ گزینوں کو لے جانے والی کشتی ڈوب گئی جس کے نتیجے میں 9 افراد ہلاک ہوگئے جب کہ 18 افراد کو بحفاظت نکال لیا گیا۔ لیبیا میں پناہ گزینوں کی کشتی الٹ گئی، کشتی میں 27 افراد سوار تھے، ایک بچے کی لاش کو نکالا جا چکا ہے جب کہ مچھیروں کی جانب سے بروقت اطلاع دینے کے باعث رسیکیو ٹیم نے 18 افراد کو بچانے میں کامیاب رہیں تاہم 8 افراد تاحال لاپتہ ہیں جن کے زندہ بچ جانے کے امکانات معدوم ہوگئے ہیں۔ تارکیں وطن بحیرہ روم پار کرنے کی کوشش کر رہے تھے اور ان کی منزل  اٹلی تھی، کشی میں 7 خواتین بھی سوار تھیں جن کے ہمراہ بچے بھی تھے۔ ریسکیو ٹیم نے 15 زخمیوں کو قریبی اسپتال منتقل کیا ہے جہاں تارکین وطن کو طبی امداد دی جارہی ہے۔ واضح رہے کہ بحیرہ روم کے ذریعے اٹلی میں داخل ہونے کے لیے تارکین وطن خطرات مول لیتے ہیں، ہر سال کشی ڈوبنے کے درجنوں واقعات رونما ہوتے ہیں لیکن تارکین وطن کی آمد کا سلسلہ تھم نہیں سکا ہے اور رواں برس میں اب تک 350 سے زائد تارکین وطن اٹلی پہنچے ہیں۔

News Code 1889014

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 6 =