چین نے ترکی  کے شہر ازمیر میں اپنا قونصل خانہ بند کردیا

چین نے ترکی کے تیسرے بڑے شہر ازمیر میں واقع اپنا قونصل خانہ بند کر دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ چین نے ترکی کے تیسرے بڑے شہر ازمیر میں واقع اپنا قونصل خانہ بند کر دیا ہے۔

چین نے ترکی کو دھمکی دی ہے کہ اگر اس نے یغور مسلمانوں کے حوالے سے چین پر مزید تنقید کی تو اسے معاشی نتائج بھی بھگتنا پڑیں گے۔ انقرہ میں چینی سفیر ڈینگ لی کا کہنا تھا کہ اگر ترکی چین کی اندرونی سیاست پر تقید جاری رکھے گا تو وہ دونوں ملکوں کے باہمی معاشی تعلقات کو خطرے میں ڈالے گا۔ دوستوں میں عدم اتفاق یا غلط فہمیاں ہو سکتی ہیں لیکن ہمیں کھلے عام ایک دوسرے پر تنقید کرنے کی بجائے ان غلط فہمیوں کو بات چیت کے ذریعے دور کرنا چاہیے۔ ایسے معاملات پر کھلے عام بات کرنا کوئی مثبت رویہ نہیں ہے اور اگر آپ ایک غیرتعمیری راستے کا انتخاب کرتے ہیں تو دونوں ملکوں کے باہمی اعتماد پر اس کے بہت منفی اثرات مرتب ہوں گے، جن کا اثر ہمارے تجارتی و معاشی تعلقات پر بھی پڑے گا۔

واضح رہے کہ ترکی نے چین کے مغربی علاقے ژن جیانگ کے یغور مسلمانوں پر چینی حکام کی طرف سے روا رکھے جانے والے ناروا سلوک پر سخت موقف اپنایا ہے اور ترک صدر رجب طیب اردوغان بھی کئی مواقع پر اس حوالے سے چین پر تنقید کر چکے ہیں۔

News Code 1888679

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 7 =