حضرت امام خامنہ ای اور صدر بشار اسد کی ملاقات فاتحین کی ملاقات تھی

حزب اللہ لبنان کی اجرائی کونسل کے نائب سربراہ نے کہا ہے کہ رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت امام خامنہ ای اور صدر بشار اسد کے درمیان تہران میں حالیہ ملاقات فاتحین کی ملاقات تھی جنھوں نے شام اور علاقائي ممالک و اقوام کے بارے میں دشمنوں کی بڑی سازشیں ناکام بنادیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے النشرہ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ حزب اللہ لبنان کی اجرائی کونسل کے نائب سربراہ شیخ علی دعموش نے کہا ہے کہ رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت امام خامنہ ای اور صدر بشار اسد کے درمیان تہران میں حالیہ ملاقات فاتحین کی ملاقات تھی جنھوں نے شام اور علاقائي ممالک و اقوام کے بارے میں دشمنوں کی بڑی سازشیں ناکام بنادیں۔ انھوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خاتمہ اور غاصب صہیونی حکومت پر مکمل فتح تک اسلامی مزاحمت کی  جد وجہد کا سلسلہ جاری رہےگا۔ اسلامی مزامحت لبنان میں باقی اور ثابت رہےگی اور اسرائیل کے خطرات اور چیلنجوں کا مقابلہ کرنے کے سلسلے میں اپنی ذمہ داریوں پر عمل کرےگی۔ انھوں نے کہا کہ برطانیہ کی طرف سے حزب اللہ کو دہشت گردی کی لسٹ میں قراردینے سے حزب اللہ پر کوئی اثر نہیں پڑےگا اس سے برطانیہ کا مکروہ چہرہ دنیا کے سامنے نمایاں ہوگيا ہے۔ حزب اللہ لبنان علاقائی اور عالمی سطح پر اپنی ذمہ داریوں کو پورا کرنے کے سلسلے میں کسی کے دباؤ میں نہیں آئے گی۔

News Code 1888545

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 1 =