بھارتی حکومت غیرذمہ دارانہ رویہ بند کرے، محمود قریشی

پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ بھارت پاکستان کو دباؤ میں لانے کا خیال ذہن سے نکال دے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکسپریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ بھارت پاکستان کو دباؤ میں لانے کا خیال ذہن سے نکال دے۔

اسلام آباد میں نیوز کانفرنس کے دوران شاہ محمود قریشی نے کہا کہ کشمیری خوف میں مبتلا ہیں، لوگ کاروبار بند کرکے گھروں میں بیٹھے ہوئے ہیں، نئی دہلی میں بےقصورکشمیری نوجوان پر تشدد کیا گیا، حریت قیادت کو کشمیر سے باہر دھکیلا جارہا ہے، مزید10 ہزار بھارتی فوجی کشمیر بھجوائے جارہے ہیں، جے پور جیل میں پاکستانی قیدی کو قتل کردیا گیا۔ کشمیریوں پر حملے کیے گئے اور بھارتی حکومت خاموش تماشائی بنی رہی, آخر کار بھارتی سپریم کورٹ کو کشمیریوں کی جان و مال کی حفاظت کے لیے بیان دینا پڑا۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ  بی جے پی سیاسی مقاصد کے لیے جنون پھیلانا بند کرے، بھارتی حکومت تدبر سے کام لے اور امن کو داؤ پر نہ لگائے، بھارتی اقدامات سے زمینی حقائق تبدیل نہیں ہوں گے۔ بھارتی حکومت غیرذمہ دارانہ رویہ بند کرے کیونکہ لوگوں کو قید کیا جاسکتا ہے لیکن نظریات اور سوچ کو قید نہیں کرسکتے۔ کشمیر کی نئی نسل میں ایک نئی حریت کی کیفیت جاگ چکی ہے جو دبنے والی نہیں۔ پاکستانی وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان امن کا خواہاں ہے اور پاکستان کشیدگی ختم کرنے کے لئے اقدامات کررہا ہے، بھارت پاکستان کو دباؤ میں لانے کا خیال ذہن سے نکال دے، بھارتی رویے کے خلاف پاکستانی قوم یکجا ہے۔

News Code 1888362

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 9 =