برطانوی کابینہ کے ایک اور وزیر بریگزٹ ڈیل سے اختلاف کے باعث مستعفی

برطانوی وزیراعظم تھریسامے کی یورپی یونین کے ساتھ بریگزٹ ڈیل سے اختلاف کے باعث برطانوی کابینہ کے ایک اور وزیر نے احتجاج کرتے ہوئے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ برطانوی وزیراعظم تھریسامے کی یورپی یونین کے ساتھ بریگزٹ ڈیل سے اختلاف کے باعث برطانوی  کابینہ کے سائنس و ٹیکنالوجی  کے وزیر نے احتجاج کرتے ہوئے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق بریگزٹ ڈیل پر وزیراعظم تھریسامے کی مشکلات میں تاحال کمی نہیں آسکی، تھریسامے کابینہ کے ایک اور وزیر نے بریگزٹ ڈیل پر اختلافات کے باعث اپنا استعفیٰ پیش کردیا ہے۔ مستعفی ہونے والے وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی نے کہا کہ تھریسامے کے بریگزٹ پلان کا مطلب برطانیہ کا اپنی آواز اور طاقت سے دست بردار ہونا ہے جو کہ ریفرنڈم کے نتائج سے بھی متصادم ہے۔ عوام نے انخلاء کے لیے ضرور ووٹ دیا لیکن اپنی خودداری اور طاقت سے انحراف کی بنیاد پر نہیں۔وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی سام گیماہ بریگزٹ ڈیل پر وزیراعظم تھریسامے سے اختلافات کے باعث مستعفیٰ ہونے والے چھٹے وزیر ہیں۔ سام گیماہ نے 2016ء میں ہونے والے ریفرنڈم میں برطانیہ کو یورپی یونین میں شامل رہنے کے حق میں ووٹ دیا تھا۔واضح رہے کہ یورپی یونین سے برطانیہ کے انخلاء کے لیے وزیراعظم تھریسامے کے بریگزٹ پلان پر یورپی یونین کے تمام رہنماؤں نے اتفاق کرلیا ہے اور اب اس ڈیل کو برطانوی پارلیمنٹ سے منظور کرانا ہوگا۔

News Code 1886108

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 15 =