فرانس میں مظاہرین کا صدارتی محل پر حملہ

فرانس میں ڈیزل کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف لاکھوں مظاہرین سڑکوں پر نکل آئے ہیں جب کہ سیکڑوں مظاہرین میں صدارتی محل میں گھسنے کی کوشش کی ۔

مہر خبررساں ایجنسی نے فرانسیسی خبررساں ایجنسی کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ فرانس میں ڈیزل کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف لاکھوں مظاہرین سڑکوں پر نکل آئے ہیں جب کہ سیکڑوں مظاہرین میں صدارتی محل میں گھسنے کی کوشش کی ۔ اطلاعات کے مطابق فرانس میں تیل کی مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے پر عوام کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو گیا اور لاکھوں مظاہرین سڑکوں پر نکل آئے۔  مشتعل مظاہرین کو روکنے کے لیے بڑی تعداد میں پولیس کی نفری تعینات کی گئی تھی۔ دارالحکومت پیرس میں مظاہرین میں شامل 43 سالہ شخص نے ہاتھ میں گرینیڈ لے کر صدارتی محل میں داخل ہونے کی کوشش کی جسے طویل مذاکرات کے بعد پولیس اہلکاروں نے حراست میں لے لیا۔ مشتعل مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے شیلنگ کی گئی۔

News Code 1885910

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 3 =