ہندوستان میں ماؤ باغیوں کے حملے میں 2 سیاسی رہنما قتل

ہندوستان کی ریاست آندھرا پردیش میں ماؤ باغیوں نے فائرنگ کر کے رکن اسمبلی کیدار سرویسوارا اور سابق رکن اسمبلی سیوری سوما کو قتل کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ہندوستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستان کی ریاست آندھرا پردیش میں ماؤ باغیوں نے فائرنگ کر کے رکن اسمبلی کیدار سرویسوارا اور سابق رکن اسمبلی سیوری سوما کو قتل کردیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق تیلگو دیشم پارٹی کے دو رہنماؤں کو ماؤ باغیوں نے آندھرا پردیش کے ضلع وشاکھا پٹنم میں گولیاں مار کر قتل کردیا ہے۔ دونوں رہنما علاقے میں کان کنی کے ایک معاہدے پر ماؤ باغیوں سے  گفت و شنید کرنے گئے تھے کہ 40 سے 50 ماؤ باغیوں نے دھاوا بول دیا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ رکن اسمبلی کو جن علاقوں کے دورے پر جانا تھا وہاں سیکیورٹی انتظامات مکمل تھے لیکن وہ آخری وقت میں اپنا دورہ تبدیل کرتے ہوئے گاؤں دمبری گودا چلے گئے جو ماؤ باغیوں کے زیر تسلط ہے۔ حملہ آوروں میں خواتین بھی شامل تھیں۔ اراکین اسمبلی کے قتل کا واقعہ اس وقت پیش آیا ہے جب ماؤ باغی اپنی جماعت کا یوم تاسیس منا رہے ہیں۔ اس بار یوم تاسیس پورے ہفتے منایا جائے گا جس کی اختتامی تقریب 27 ستمبر کو ہوگی۔ وزیراعلیٰ چندر بابو نائیڈو نے اراکین اسمبلی کے قتل کی مذمت کرتے ہوئے قاتلوں کی گرفتاری کا حکم دیا ہے۔

News Code 1884211

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 12 =