سوئٹزرلینڈ میں اجرت میں برابری کے لیے ہزاروں افراد کا مظاہرہ

سوئٹزرلینڈ میں خواتین اور مردوں کے درمیان اجرت کے واضح فرق کے خلاف برن میں 20 ہزار افراد نے مارچ کیا اور تنخواہوں کی ادائیگی میں صنفی امتیاز کو ختم کرنے کا مطالبہ کیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ سوئٹزرلینڈ میں خواتین اور مردوں کے درمیان اجرت کے واضح فرق کے خلاف برن میں 20 ہزار افراد نے مارچ کیا اور تنخواہوں کی ادائیگی میں صنفی امتیاز کو ختم کرنے کا مطالبہ کیا۔ تنخواہوں میں عدم برابری کے خلاف احتجاج کرنے والی 40 یونین کا مشترکہ بیان میں کہنا تھا کہ 20 ہزار سے زائد افراد نے مطالبہ کیا کہ قانون سازوں کو یکساں کام کرنے والے خواتین اور مردوں کے درمیان تنخواہوں کے فرق کو کم کرنے کے لیے مزید کام کرنا ہے۔ شہریوں کی جانب سے تنخواہوں کی یکسانیت کے لیے مظاہرے ایک ایسے وقت میں شروع کیے گئے ہیں، جب سوئٹزرلینڈ کے ایوان زیریں میں اس حوالے سے مزید سخت قانون سازی کی تیاری کی جارہی ہے۔

خیال رہے کہ سوئٹزرلینڈ کے آئین میں صنفی برابر کا قانون 1981 سے رائج ہے لیکن اس کے باوجود خواتین کو مردوں کے مقابلے میں 20 فیصد کم تنخواہ ادا کی جاتی ہے۔

News Code 1884210

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 7 =