نواز شریف اور اس کی  فیملی کی سزا معطلی کی درخواستیں نا قابل سماعت قرار

پاکستان قومی احتساب بیورو نے سزا یافتہ سابق وزیراعظم نواز شریف و دیگرکی سزا معطل کرنے کی مخالفت کرتے ہوئے عبوری ریلیف کی درخواستیں ناقابل سماعت قرار دے کر خارج کرنے کی استدعا ہے ۔

مہر خبررساں ایجنسی نے جنگ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان قومی احتساب بیورو نے سزا یافتہ سابق وزیراعظم نواز شریف و دیگرکی سزا معطل کرنے کی مخالفت کرتے ہوئے عبوری ریلیف کی درخواستیں ناقابل سماعت قرار دے کر خارج کرنے کی استدعا ہے ۔ نیب کے جواب میں کہا گیا کہ احتساب عدالت کے فیصلے میں کوئی خامی نہیں، استغاثہ نے کیس ثابت کیا جس کے بعد بار ثبوت ملزمان پر منتقل ہو گیا تھا مگر انہوں نے اپنے دفاع میں کچھ پیش ہی نہیں کیاہے۔

ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل نیب سردار مظفر عباسی نے ملزم نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ محمد صفدر کی سزا معطلی کی درخواستوں پر شق وار جواب اسلام آباد ہائی کورٹ میں جمع کرا دیا ہے جو 11 صفحات پر مشتمل ہے۔

تحریری جواب میں کچھ اعتراضات بھی اٹھائے گئے ہیں اور کہا گیا کہ نیب نے ملزمان پر عائد فرد جرم کے الزامات کو ثابت کیا جس کے بعد بار ثبوت ملزمان پر تھا لیکن جواب میں کوئی دفاع پیش نہیں کیا گیا۔

جواب میں مزید یہ بھی بتایا گیا کہ نواز شریف پر عوامی عہدہ رکھ کر جائیداد بنانے کا جرم ثابت ہو چکا جبکہ مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر نے ان کی معاونت کی، تینوں کو ٹھوس شواہد کی بنیاد پر سزا سنائی گئی ہےجبکہ احتساب عدالت کے فیصلے میں سزا کی وجوہات درج ہیں۔

News Code 1883181

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 8 =