ہندوستان کی ریاست اترپردیش میں دیمک دس لاکھ روپے کھا گئی

ہندوستان کی ریاست اترپردیش کے ایک بینک میں رکھےتقریباً دس لاکھ روپے کے نوٹوں کو دیمک کھا گئی ہے جس کے لیے بینک ملازمین کو ذمہ دار ٹھہرایا گیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ہندوستان کی سرکاری خبررساں ایجنسی پی ٹی آئي کے حوالے سے نقل کیا ہے کہہندوستان کی ریاست اترپردیش کے ایک بینک میں رکھےتقریباً دس لاکھ روپے کے نوٹوں کو دیمک کھا گئی ہے جس کے لیے بینک ملازمین کو ذمہ دار ٹھہرایا گیا ہے۔یہ واقعہ  ریاست اترپردیش کےضلع بارہ بنکی کے قصبہ فتح پور میں سٹیٹ بینک آف انڈیا کی برانچ میں پیش آیا ہے۔بینک کے ملازمین کو اس معاملے میں لاپرواہی برتنے کا قصوروار پایا گیا ہے اور سٹیٹ بینک آف انڈیا نے اس معاملے میں تحقیقات کے احکامات دیے ہیں۔

سٹیٹ بینک آف انڈیا کے چیف جنرل منیجر ابھے سنگھ نے پی ٹی آئی سے گفتگو کرتے ہوئےکہا کہ’برانچ منیجر لاپرواہی برتنے کے قصوروار پائے گئے ہیں جس کی وجہ سے بارہ بنکی ضلع کی فتح پور برانچ میں نوٹ خرابہوگئے ہیں۔ اس معاملے میں جو بھی افراد ذمہ دار پائے جائیں گے ان کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

ابھے سنگھ کے مطابق چونکہ یہ بینک کی غلطی ہے اس لیے بینک ہی اس نقصان کو برداشت کریگا۔ اس میں عوام کو کوئی نقصان نہیں اٹھانا پڑے گا۔

News Code 1299958

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 8 =