اقوام متحدہ کی حقوق انسانی کی ٹیم لیبیا روانہ

لیبیا میں حقوق انسانی کی خلاف ورزیوں کے الزامات کا جائزہ لینے کے لیے اقوامِ متحدہ کی ایک ٹیم بدھ کو طرابلس پہنچ رہی ہے۔

مہرخبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ لیبیا میں حقوق انسانی کی خلاف ورزیوں کے الزامات کا جائزہ لینے کے لیے اقوامِ متحدہ کی ایک ٹیم بدھ کو طرابلس پہنچ رہی ہے۔

لیبیا کے خونخوار صدر کرنل معمر قذافی کی حامی فوج اور انقلابیوں کے مابین فروری سے جاری لڑائی میں حقوقِ انسانی کی خلاف ورزیوں کے الزامات کا جائزہ لینے کے لیے اقوامِ متحدہ کی ایک ٹیم بدھ کو طرابلس پہنچ رہی ہے۔اس ٹیم کا تقرر اقوامِ متحدہ کی حقوقِ انسانی کی کونسل نے کیا ہے اور لیبیائی حکومت نے اسے تعاون کی یقین دہانی کروائی ہے۔

تین ارکان پر مشتمل ٹیم کا کہنا ہے کہ وہ کرنل قذافی کی حامی فوج کے علاوہ انقلابیوں اور نیٹو افواج پر لگنے والے الزامات کی بھی تحقیقات کرے گی اور ایسے تمام واقعات کا جائزہ لے گی جن میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی کی بات سامنے آئی ہے۔

یہ دورہ ایک ایسے وقت ہو رہا ہے جب قذافی حکومت کی حامی فوج اور باغیوں کے درمیان ساحلی شہر مصراتہ میں لڑائی جاری ہے اور منگل کی شام سرکاری فوج نے بندرگاہ پر میزائل بھی پھینکے ہیں اور ان حملوں میں تین افراد کی ہلاکت کی اطلاعات ہیں۔

لیبیا کا تیسرا سب سے بڑا شہر مصراتہ ملک کے مغربی علاقے میں باغیوں کا اہم گڑھ ہے اور اس کی بندرگاہ پر ایسے افراد موجود ہیں جو لیبیا کی موجودہ صورتحال کی وجہ سے ملک چھوڑ کر بھاگ رہے ہیں۔انسانی حقوق کی تنظیموں کے مطابق مصراتہ میں اب تک ایک ہزار کے قریب افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ جبکہ مجموعی طور پر لیبیا میں دس ءزار سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

News Code 1298976

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 1 =