تیسرے عرب ڈکٹیٹر کا30 دن میں اقتدار سے الگ ہونے کا اعلان

امریکہ و اسرائیل نواز یمن کے ڈکٹیٹر صدر علی عبداللہ صالح نے خلیج تعاون کونسل کی تجویز قبول کرتے ہوئے 30 دن میں اقتدار سے علیحدگی پر رضا مندی ظاہر کر دی ہے۔

مہرخبررساں ایجنسی نے الجزیرہ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ و اسرائیل نواز یمن کے ڈکٹیٹر صدر علی عبداللہ صالح نے خلیج تعاون کونسل کی تجویز قبول کرتے ہوئے 30 دن میں اقتدار سے علیحدگی پر رضا مندی ظاہر کر دی ہے۔

امریکا نے صدرصالح سے اقتدارکی فوری منتقلی یقینی بنانے پرزوردیا ہے۔سیاسی بحران کے خاتمے کیلیے یمن کی حکمراں جنرل پیپلز کانگریس نے خلیج تعاون کونسل کی تجویزمان لی ہے۔ جس کے تحت صدر صالح تیس روزکے اندراقتدار اپنے نائب کو منتقل کردیں گے اورقومی حکومت تشکیل دی جائے گی جو90روز کے اندر انتخابات کرا کر اقتدار عوام کے منتخب نمائندوں کے سپرد کر دے گی ۔حزب اختلاف نے اس کاخیرمقدم کیا ہے تاہم قومی حکومت میں شمولیت سے انکارکیاہے۔اب امریکہ نے بھی عبد اللہ صالح کا ساتھ چھوڑنا شروع کردیا ہے۔ امریکہ عرب ڈکٹیٹر بادشاہوں کی حمایت اور سرپرستی کررہا ہے جبکہ عوام عرب ممالک میں جمہوریت کا مطالبہ کررہے ہیں۔

News Code 1296324

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 1 =