شاہ بحرین کی بدنام زمانہ امریکی گلوکارہ سے ملاقات

تمام تجزيہ کار اس بات پر متفق ہیں کہ بحرین آل خلیفہ حکومت کے تحت حالیہ برسوں میں امریکی ، یورپی اور سعودی شہزادوں کی عیش و عشرت ، عیاشی اور فساد کے مرکز میں تبدیل ہوگیا ہے۔

مہرخبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق بحرین کی موجودہ صورتحال کےپیش نظر ذرائع ابلاغ بحرین کی  مزید شناخت اور  جستجو میں لگ گئے ہیں اس رپورٹ مطابق تمام تجزيہ کار اس بات پر متفق ہیں کہ بحرین  آل خلیفہ حکومت کے تحت  حالیہ برسوں میں امریکی ، یورپی اور سعودی شہزادوں کی عیش و عشرت ، عیاشی اور فساد کے مرکز میں تبدیل ہوگیا ہے۔ آل خلیفہ حکومت اپنے عوام کی فلاح و بہبود اور ان کے مطالبات اور حقوق پر توجہ دینے کے بجائے  غیر ملکی سیاحوں کے لئے عیش و  عشرت اور عیاشی  کی جگہوں کے بناؤ اور سنگار میں مشغول رہی ہے آل خلیفہ حکومت کی  بے دینی اور گمراہی بحرین کے عوام کے موجودہ انقلاب میں مؤثر ثابت ہوئی ہے اور یہی مسئلہ تیونس ، مصر اور یمن و لیبیا میں سامنے آیا ہے جہاں عرب عوام ، عرب حکام کی بےدینی اور گمراہی  کو دیکھ کر ان کے خلاف کھڑے ہوگئے ہیں کیونکہ ان امریکہ نواز عرب ڈکٹیٹروں میں اسلام کی کوئی علامت بھی موجود نہیں ہے۔

 سعودی عرب اور بحرین کے فوجی قرآن پاک  کو جلا رہےہیں مسجدوں کو شہید کررہے ہیں مقدس مقامات کی توہین کررہے ہیں اور سعودی فوجیوں کے سفاکانہ عمل سے ظاہر ہوتا ہے سعودی عرب کے حکام کفار قریش کا نقشہ پیش کررہے ہیں یہ سعودی حکام ابو جہل اور ابو لہب کی اولاد ہیں ان پر پیغمبر اسلام صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی تعلیمات کا کوئی اثر نہیں ہے۔

News Code 1292851

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 10 =