اسرائیل نواز مصری فرعون حسنی مبارک کی پارٹی تحلیل

مصر میں ایک عدالت نےمصر کے سابق ڈکٹیٹر اور فرعون صدر حسنی مبارک کی سیاسی جماعت کو تحلیل کرنے اور اس کے سارے اثاتے منجمد کرنے کا حکم دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ مصر میں ایک عدالت نےمصر کے  سابق ڈکٹیٹر اور فرعون صدر حسنی مبارک کی سیاسی جماعت کو تحلیل کرنے اور اس کے سارے اثاتے منجمد کرنے کا حکم دیا ہے۔عدالت نے حکم دیا ہے کہ حسنی مبارک کی نیشنل ڈیموکریٹک پارٹی کے تمام اثاتے، فنڈز اور جائیداد کو ضبط کر کے حکومت کو دے دیا جائے۔نیشنل ڈیموکریٹک پارٹی کی بنیاد 1970ء میں انوار سادات معدوم نے رکھی تھی۔حسنی مبارک اور ان کے صاحبزادوں کو شدید عوامی دباؤ کے پیش نظر حراست میں لے لیا گیا تھا اور ان کو بدعنوانی اور عوامی احتجاج میں ہلاکتوں کے ذمہ دار ہونے کے الزامات پر مقدمات کا سامنا ہے۔اور مصری ذرائع کے مطابق ان الزامات میں مصری فرعون حسنی مبارک کو پھانسی کی سزا بھی ہوسکتی ہے۔ مصری فرعون نے اسرائیل کو کافی مدد فراہم کی اور مصری فرعون حسنی مبارک  کو بچانے کے لئے اسرائیل اور سعودی عرب نے آخری دم تک کوشش کی لیکن ان کی تمام کوششیں ناکام ہوگئیں سعودی عرب امریکہ کے تعاون سے عرب ڈکٹیٹروں کو بچانے کی کوشش کررہا ہے اور اس سلسلے میں سعودی عرب نے بحرین میں عوامی مظاہروں کو کچلنے کے لئے 2000 فوجی بحرین روانہ کئے ہیں بحرین میں سعودی عرب سنگین جرائم کا ارتکاب کررہا ہے۔

News Code 1290846

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 3 =