مرحوم ذوالفقارعلی بھٹوکیس کی پیروی کے لیے وفاقی وزیرِ قانون مستعفی

پاکستان کے سابق وزیرِاعظم اور پاکستان پیپلزپارٹی کے بانی مرحوم ذوالفقار علی بھٹو کی پھانسی کے کیس میں صدارتی ریفرنس کی پیروی کرنے کے لیے وفاقی وزیرِ قانون بابراعوان نے اپنی وزارت سے استعفٰی دے دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہپاکستان کے سابق وزیرِاعظم اور پاکستان پیپلزپارٹی کے بانی مرحوم ذوالفقار علی بھٹو کی پھانسی کے کیس میں صدارتی ریفرنس کی پیروی کرنے کے لیے وفاقی وزیرِ قانون بابر اعوان نے اپنی وزارت سے استعفٰی دے دیا ہے۔بدھ کو سپریم کورٹ کے باہرذرائع سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا ہم آئین کی روشنی میں تاریخ پر لگے سیاہ دھبے کو مٹائیں گے۔انہوں نے صدر آصف علی زرداری اور وزیرِاعظم یوسف رضا گیلانی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے یہ تاریخ ساز فریضہ اُن کے سپرد کیا کہ وہ اس ریفرنس کی پیروی کریں۔پارٹی کی قیادت جن میں وزرا، وزرائے اعلٰی اور دیگر عہدیدار شامل ہیں، اس ریفرنس کی سماعت کے دوران سپریم کورٹ آئیں گے، کیونکہ یہ قانون اور آئین کی بالادستی، عدلیہ کی آزادی، جمہوریت، اور آئین اور وفاق کے مستقبل کے لیے تاریخ کا اہم موڑ ہے۔بابر اعوان نے کہا کہ پیپلز پارٹی بدلے کی سیاست پر یقین نہیں رکھتی اور وہ ظلم کا خاتمہ چاہتی ہے تاکہ آئندہ پاکستان کی سیاست میں ہی نہیں بلکہ پاکستان کے معاشرے میں کسی دوسرے شخص کے ساتھ ایسا ظلم نہ ہو جو ذوالفقار علی بھٹو کے ساتھ ہوابابر اعوان نے کہا کہ وہ اگر وزير ا‏ظم بھی ہوتے تب استعفی دیکر پاکستان پیپلزپارٹی کے بانی مرحوم ذوالفقار علی بھٹوکے کیس کی پیروی کرتے۔

News Code 1288404

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 12 =