اسرائیل نے اقوام متحدہ سےحقائق چھپانے اور مسترد کرنے کا مطالبہ کیا ہے

اسرائیل نے اقوام متحدہ پر زور دیا ہے کہ اس رپورٹ کے حقائق کو نظر انداز اور مسترد کردے جس میں کہا گيا ہے کہ اسرائیل نےسن دو ہزار آٹھ اور نو میں غزہ پر حملے میں جنگی جرائم کا ارتکاب کیا تھا۔

مہر خبررساں نے فرانسیسی خبررساں ایجنسی کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ اسرائیل نے اقوام متحدہ پر زور دیا ہے کہ اس رپورٹکے حقائق کو نظر انداز اور مسترد کردے جس میں کہا گيا ہے کہ اسرائیل نےسن دو ہزار آٹھ اور نو میں غزہ پر حملے میں جنگی جرائم کا ارتکاب کیا ہے۔ اسرائیل نے سن دو ہزار آٹھ اور نو میں غزہ پر حملہ کیا تھا جس میں تقریباً چودہ سو فلسطینی شہید ہوگئے تھے۔۔ اقوام متحدہ کی طرف سے قائم کیے گئے کمیشن نے کہا تھا کہ اسرائیل نے غیر ضروری طاقت کا استعمال کیا تھا جس میں شہریوں کو اور غیر فوجی املاک کو جان بوجھ کر نشانہ بنایا گیا تھا۔

رپورٹ میں حماس پر بھی الزام عائد کیا گیا تھا کہ اس نے جان بوجھ کر شہریوں کو نشانہ بنایا ہے اور اسرائیل علاقوں میں راکٹ فائر کر کے دہشت پھیلانے کی کوشش کی ہے ۔

News Code 1280408

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 17 =