طالبان دہشت گردوں نےپشاور کے علاقہ متنئی میں دو اسکول تباہ کردیئے ہیں

پاکستان کے صوبہ خیبر پختونخواہ کے دارالحکومت پشاور کے مضافاتی علاقے متنئی میں طالبان دہشت گردوں نے دو سرکاری سکولوں کو بم دھماکوں سے تباہ کر دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہےکہ پاکستان کے صوبہ خیبر پختونخواہکے دارالحکومت پشاور کے مضافاتی علاقے متنئی میں طالبان دہشت گردوں  نے دو سرکاری سکولوں کو بم دھماکوں سے تباہ کر دیا ہے۔پولیس کے مطابق پہلا واقعہ جمعہ اور سنیچر کی درمیانی رات پشاور سے کوئی پندرہ کلومیٹر دور جنوب کی جانب تھانہ متنئی کے علاقہ شیراکرہ میں واقع ہوا جہاں ہائی سکول کے عمارت میں دو مقامات پر دو بم دھماکہ ہوئے ہیں۔اس کے نتیجہ میں سکول کی عمارت مکمل طور پر تباہ ہوگئی ہےپولیس نے کہا کہ بیس منٹ کے وقفے کے بعد متنئی کے ایک اور علاقے دروازگئی میں واقع ایک پرائمری سکول میں بھی دو دھماکے کیے ہیں جس سے سکول کی عمارت مکمل طور پر زمیں بوس ہوگئی ہے۔پولیس کے مطابق دونوں سکول لڑکوں کے تھے جو ایک دوسرے سے تقریباً آٹھ کلومیٹر کے فاصلے پر واقع ہیں۔واضح رہے کہ خیبر پختوخواہاور قبائلی علاقوں میں پچھلے کئی سالوں سے طالبان دہشت گردوں کی جانب سےسکولوں اور سرکاری عمارتوں پر حملوں کا سلسلہ جاری ہے جس میں اب تک سینکڑوں ادارے تباہ ہوچکے ہیں۔ ہزاروں طُلباء تعلیم کے حصول سے محروم ہوچکے ہیں جن میں بیشتر لڑکیوں کے سکول بتائے جاتے ہیں۔

News Code 1278273

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 3 =