تینوں جزائر ایران کا اٹوٹ حصہ ہیں//  بحرین میں سعودی مداخلت غلط ہے

اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے ایران کے تینوں جزائر کو ایران کا اٹوٹ حصہ قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ تینوں جزائر ہمیشہ سے ایران کے تھے اور ہمیشہ ایران کے رہیں گے، ترجمان نے بحرین میں خلیجی ممالک کی طرف سے فوج روانہ کرنے کے اقدام کو غلط قراردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگار کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان رامین مہمانپرست نے نامہ نگاروں کے ساتھ گفتگو میں  ایران کے تینوں جزائر کو ایران کا اٹوٹ حصہ قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ تینوں جزائر ہمیشہ سے ایران کے تھے اور ہمیشہ ایران کے رہیں گے اگر کسی کو کوئی ابہام ہے تو ایران ابہام برطرف کرنے کے لئے تیار ہے ترجمان نے بحرین میں خلیجی ممالک کی طرف سے فوج روانہ کرنے کو غلط اقدام قراردیتے ہوئے کہا کہ بحرین کے عوام کے مطالبات درست اور جائز ہیں اور عوام کے درست مطالبات کو کچلنے کے لئے طاقت کا استعمال غلط ہےانھوں نے کہا کہ بحرینی حکام  کو چاہیے کہ وہ بحرین کے معاملے میں امریکی اور سعودی مداخلت کو روکیں انھوں نے کہا کہ خلیجی ممالک کی طرف سےبحرین کے پرامن مظاہرین کو کچلنے کے لئے فوج روانہ کرنے سے بحرینی عوام میں اشتعال پیدا ہوگا جس کی وجہ سے تشدد میں مزید اضافہ ہوسکتا ہے ترجمان نے کہا کہ بحرین کے مسئلہ میں خلیجی ممالک کی فوجی مداخلت سے معاملہ مزید پیچیدہ ہوجائے گا رامین مہمانپرست نے کہا کہ امریکی وزير خارجہ کا بحرین کا دورہ اور سعودی عرب اور خلیجی ممالک کی جانب سے فوج کی بحرین روانگي کا آپس میں گہرا رابطہ ہے اور اس سے علاقائي ممالک میں بحران مزید پیچیدہ ہوجائے گا انھوں نے کہا کہ امریکہ کو ڈکٹیٹروں کی حمایت کرنے کے بجائے عوامی مطالبات اور جمہوریت کا ساتھ دینا چاہیے انھوں نے کہا کہ امریکہ اپنے مکر و فریب کے ذریعہ خطے میں اپنے ڈکٹیٹروں کو عوامی قہر سے نہیں بچا سکے گا ، ترجمان نے کہا کہ امریکہ علاقائی ممالک کو ایران سے ڈرا کر اپنے ہتھیاروں کو وسیع پیمانے پر فروخت کررہا ہے ۔

News Code 1275071

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 1 =