طالبان نے پاکستان کے وفاقی وزير کو قتل کرنے کی ذمہ داری قبول کرلی ہے

پاکستان کے صوبہ پنجاب سے تعلق رکھنے والے طالبان شدت پسندوں نے پاکستان کےوفاقی وزیر اقلیتی امور شہباز بھٹی کوقتل کرنے کی ذمہ داری قبول کرلی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے صوبہ پنجاب سے تعلق رکھنے والے طالبان شدت پسندوں نے پاکستان کےوفاقی وزیر اقلیتی امور شہباز بھٹی کوقتل کرنے کی ذمہ داری قبول کرلی ہے۔پیپلز پارٹی سے تعلق رکھنے والے وفاقی وزیر اقلیتی امور شہباز بھٹی وفاقی دارالحکومت کے سیکٹر آئی ایٹ تھری میں واقع اپنی والدہ کے گھر سے سرکاری گاڑی نمبرجی وی 444میں دفتر جانے کیلئے نکلے تھے ، جب وہ50میٹر کے فاصلے پر ہی روز پلازہ کے سامنے پہنچے تو وہاں موجود نامعلوم حملہ آوروں نے ان کی گاڑی پر فائرنگ کر دی ، ان کو چہرے اور سینے پر گولیاں لگیں، جس میں وہ شدید زخمی ہوگئے ، ان کا ڈرائیور انہیں تشویشناک حالت میں الشفا اسپتال لے گیا ، جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے۔حملہ آور موقع سے فرار ہوگئے ہیں، جبکہ پولیس حکام نے جائے وقوعہ کا محاصرہ کرلیا ہے اور شواہد جمع کئے جارہے ہیں۔

News Code 1265562

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 15 =