امریکی صدر اور ڈیموکریٹس نمائندوں کے درمیان مذاکرات ناکام

میکسیکو کی سرحد پر دیوار کے لیے فنڈنگ سے انکار پر صدر ٹرمپ برہم ہوگئے اور ڈیموکریٹس کے ساتھ بات چیت چھوڑ کر اچانک اٹھ کر چلے گئے جس کے بعد امریکی صدر اور ڈیموکریٹس نمائندوں کے درمیان مذاکرات ناکام ہوگئے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایسوسی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ میکسیکو کی سرحد پر دیوار کے لیے فنڈنگ سے انکار پر صدر ٹرمپ برہم ہوگئے اور ڈیموکریٹس کے ساتھ بات چیت چھوڑ کر اچانک اٹھ کر چلے گئے جس کے بعد امریکی صدر اور ڈیموکریٹس نمائندوں کے درمیان مذاکرات ناکام ہوگئے ہیں۔ ڈیموکریٹ قائد چک شومر نے صدر ٹرمپ سے وائٹ ہاؤس میں ملاقات کی مگر وہ رقم نہ دینے کے فیصلے کو تبدیل کرنے پر راضی نہیں ہوئے۔ اس ملاقات کے بعد صدر ٹرمپ نے ٹوئٹر پر اپنے پیغامات میں کہا کہ انہوں نے اہم ڈیموکریٹ رہنماؤں کوخدا حافظ کہہ دیا، کوئی اور بات کرنے کا فائدہ نہیں تھا۔ یہ ملاقات مکمل طور پر ان کا وقت ضائع کرنے کے مترادف ثابت ہوئی۔ انیس روز گزرنے کے باوجود حکومتی شٹ ڈاؤن کا خاتمے کے آثار نہیں، ادھر دیوار بنانے کی حمایت میں ٹرمپ کے بڑے بیٹے نے تارکین وطن کو جانورقراردیدیا ۔اس سےقبل امریکی صدربھی تارکین وطن کوجانوروں سے تشبیہ دے چکے ہیں ، ٹرمپ کے دور حکومت کے دوران یہ تیسرا شٹ ڈاؤن ہے۔ اگر کل تک شٹ ڈاؤن برقرار رہا تو آٹھ لاکھ ملازمین اپنی تنخواہ سے محروم ہوجائیں گے۔

News Code 1887181

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 9 =