امریکہ میں ایک شخص کا 90 افراد کو قتل کرنے کا اعتراف

امریکہ میں ایک شخص نے جیل میں 90 لوگوں کو قتل کرنے کا اعتراف کیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایف پی کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ میں ایک شخص نے جیل میں 90 لوگوں کو قتل کرنے کا اعتراف کیا ہے۔ جو کہ ممکنہ طور پر امریکی تاریخ کا سب سے خطرناک سیریل کلر ہو سکتا ہے۔ اطلاعات کے مطابق 78 سالہ سیمیول لٹل نامی یہ شخص بے گھر اور منشیات کا عادی ہے اور 2012 میں اسے منشیات کے جرم میں گرفتار کیا گیا تھا۔ ایف بی آئی نے اس کے بارے میں رپورٹ پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ  وہ ماضی میں باکسر بھی رہا ہے، 2014 میں اس پر تین خواتین کے قتل کا الزام عائد کیا گیا تھا جنہیں اس نے 1987 سے 1989 کے درمیان قتل کیا تھا۔تینوں کو ایک ہی طرح سے تشدد اور گلا دبا کر قتل کیا گیا تھاعمر قیدکی سزا پانے والے سیمیول لٹل کو ریاست ٹیکساس کی جیل میں قید کیا گیا ہے جہاں اس سے ایک اور قتل کی تحقیقات جاری ہیں۔تحقیقات کے دوران پہلے اس نے 1994 میں بھائیوں کےقتل کا اعتراف کیا اور پھر ایک کے بعد ایک 1970 سے لے کر 2005 کے درمیان درجنوں افراد کے قتل کا بھی اعتراف کر ڈالا۔رواں سال مئی میں ایف بی آئی کے سامنے اس نے تمام لوگوں کے نمبر بتائے یہ بھی بتایا کہ کس کو کہاں قتل کیا۔امریکہ  میں سب سے زیادہ خطرناک سیریل کلر اب تک کیری رڈگوے ہے جس نے 49 لوگوں کو قتل کیا ، وہ اس وقت واشنگٹن کی جیل میں عمر قید کاٹ رہا ہے۔ایف بی آئی کا کہنا ہےکہ لٹل کے اعتراف کے بعد محکمہ انصاف، ٹیکساس رینجرز اور کئی ریاستوں کے ساتھ مل کرملک بھر کے غیر حل شدہ قتلوں پر دوبارہ تحقیق کی جارہی ہے۔ایف بی آئی کے مطابق ’ سیمیول لٹل کو اپنے تمام شکار اور ان کے بارے میں تمام معلومات تفصیل سےیاد ہیں ۔

News Code 1886032

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 2 =