کشمیر کے گورنر نے کشمیر اسمبلی کو تحلیل کردیا

ہندوستان کے زیر انتظام کےگورنرستیا پال ملک نے کشمیرکی اسمبلی کو تحلیل کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے کشمیر ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستان کے زیر انتظام  کےگورنرستیا پال ملک نے کشمیرکی اسمبلی کو تحلیل کردیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق گورنر نے قانون ساز اسمبلی کو رات میں اس وقت تحلیل  کرنے کا اعلان کیا جب کہ تین بڑی جماعتوں نے  اتحادی بننے کا فیصلہ کرتے ہوئے مخلوط حکومت بنانے دعویٰ کیا۔ پیپلزکانفرس کے سجادلون اورپیپلزڈیموکریٹک پارٹی کی محبوبہ مفتی نے کشمیر میں حکومت سازی کیلئے مطلوبہ سیٹیں ہونے کا دعوی کیا تھا جب کہ محبوبہ مفتی کانگریس اورنیشنل کانفرس کے اتحاد سے حکومت سازی کیلئے اکثریت حاصل کرنے کا دعوی کررہی ہیں۔محبوبہ مفتی  نے گورنر کو لکھا تھا کہ کانگریس اور نیشنل کانفرنس نے یقین دہانی کرائی ہے کہ وہ حکومت سازی کے لیے انہیں وسیع پیمانے پر سپورٹ کرنے کو تیار ہیں۔گورنر کو لکھے گئے خط میں محبوبہ مفتی نے بتایا کہ اتحادی جماعتوں کو ملا کر مجموعی طور پر ان کے پاس 56 ایم ایل ایز ہیں ، جس میں ان کی اپنی جماعت کے 29،نیشنل کانفرنس کے 15اور کانگریس کے 12 ارکان شامل ہیں۔

News Code 1885829

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 0 =