کشمیر میں ہندوستانی تحقیقاتی ادارے کی حریت رہنما آغا سید حسن سے پوچھ گچھ

ہندوستانی تحقیقاتی ادارے نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی ( این آئی اے ) نے کشمیر میں حریت رہنما اور انجمن شرعی شیعیان کے سربراہ آغا سید حسن کو سرینگر میں اپنے آفس میں طلب کرکے ایک جھوٹے مقدمے کے سلسلے میں پوچھ گچھ کی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے کشمیر ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستانی تحقیقاتی ادارے نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی ( این آئی اے ) نے حریت رہنما اور انجمن شرعی شیعیان کے سربراہ آغا سید حسن کو سرینگر میں اپنے آفس میں طلب کرکے ایک جھوٹے مقدمے کے سلسلے میں پوچھ گچھ کی ہے۔  اطلاعات کے مطابق آغاسید حسن سے سرینگر کے ہمہامہ تھانے میں پوچھ گچھ کی گئی۔ ذرائع کے مطابق " این آئی اے" نے گزشتہ برس ستمبر میں بڈگام میں واقع آغا سید حسن کے گھر پر چھاپہ بھی مارا تھا۔ آغا سید حسن کا کہنا ہے کہ ہندوستانی تحقیقاتی ادارے انھیں اور دیگر حریت رہنماؤں کو جھوٹے مقدمات میں ملوث کرکے حریت پسندوں کی آواز کو دبانے کی ناکام کوشش کررہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ان سے انکی ذاتی زندگی اور کل جماعتی حریت کانفرنس کے ساتھ انکی وابستگی کے بارے میں سوالات کیے گئے۔ ادھر ضلع بڈگام میں حریت رہنما آغا سید حسین الموسوی الصفوی سے این آئی اے کی پوچھ گچھ کے خلاف عوام نے احتجاجی مظاہرے کئے اور ہندوستان مخالف نعرے بازی کی۔

News Code 1885380

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 6 =