خطیب جمعہ کی امریکہ کے ساتھ مذاکرات نہ کرنے اور کرپشن میں ملوث افراد کے خلاف کارروائی  پر تاکید

اسلامی جمہوریہ ایران کے دارالحکومت تہران میں خطیب جمعہ نے دشمن کی طرف سے ایران کے خلاف اقتصادی جنگ مسلط کرنے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایرانی حکومت کو کرپشن میں ملوث افراد کے خلاف عملی اقدامات کو انجام دینا چاہیے۔

مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگآر کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے دارالحکومت تہران میں نماز جمعہ آیت اللہ امامی کاشانی کی امامت میں منعقد ہوئی ۔ جس میں لاکھوں مؤمنین نے شرکت کی۔ خطیب جمعہ نے دشمن کی طرف سے ایران کے خلاف اقتصادی جنگ مسلط کرنے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایرانی حکومت کو کرپشن میں ملوث افراد کے خلاف عملی اقدامات کو انجام دینا چاہیے۔

آیت اللہ امامی کاشانی نے بعض افراد میں طمع ، لالچ اور حرص  کی بیشمار استعداد اور صلاحیت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ اگر طمع ، لالچ  اور حرص کو مہار نہ  کیا جائے تو یہ امور بہت بڑی بیماری میں تبدیل ہوسکتے ہیں جنکا بعد میں علاج مشکل ہوجاتا ہے ۔ لہذا لالچی اور حریص افراد کو اہم عہدوں پر باقی نہیں رکھنا چاہیے۔

آیت اللہ امامی کاشانی نے کہا کہ حریص انسان کا ہدف مال جمع کرنا ہے البتہ وہ اپنے ہدف تک نہیں پہنچ سکتا کیونکہ موت اس کی تمام تمناؤں کو خاک میں ملادیتی ہے۔

آیت اللہ امامی کاشانی نے امریکہ کی طرف سے مذاکرات کی غیر مشروط پیشکش کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ کے ساتھ گروپ 1+5 میں مذاکرات ہوچکے ہیں مذاکرات کے نتیجے میں مشترکہ ایٹمی معاہدہ وجود میں آیا ۔ امریکہ نے خود ہی مشترکہ ایٹمی معاہدے سے خارج ہوکر ثابت کردیا کہ امریکہ ناقابل اعتماد ہے لہذا امریکہ کے ساتھ مزید مذاکرات کسی بھی صورت میں ممکن نہیں ہیں ۔ امریکہ جھوٹ بولتا ہے اور وہ اپنے قول و فعل میں سچا نہیں امریکہ اپنے عہد پر باقی نہیں رہتا لہذا امریکہ کے ساتھ مذاکرات کا کوئی فائدہ نہیں ہے۔

News Code 1882950

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 15 =